صفحۂ اول / امریکا سے / کراچی میں ہدف بنا کر قتل کرنے کے واقعات میں اضافہ، عوام میں گہری تشویش

کراچی میں ہدف بنا کر قتل کرنے کے واقعات میں اضافہ، عوام میں گہری تشویش

پاکستان کے سب سے بڑے شہر کراچی میں گذشتہ چھے ہفتوں کے دوران دہشت گردی اور ہدف بنا کر قتل کرنے کے چھ واقعات پیش آنے کے بعد شہریوں میں تشویش پائی جاتی ہے۔

ایم کیو ایم پاکستان کے سابق رہنما اور قومی اسمبلی کے سابق رکن علی رضا عابدی پر منگل کو حملے سے چند دن پہلے ہی پاک سر زمین پارٹی کے دفتر پر ایک حملہ ہوا جس میں جماعت کے دو کارکن ہلاک ہو گئے۔

اس سے قبل ایم کیو ایم پاکستان کی ایک میلاد کی تقریب پر دھماکہ ہوا جبکہ گذشتہ ماہ مسلح افراد نے چین کے قونصل خانے پر حملہ کیا جس میں سکیورٹی پر تعینات دو اہلکار ہلاک ہو گئے۔

کراچی میں اس سے پہلے بھی ہدف بنا کر قتل کرنے کے واقعات پیش آئے لیکن ماضی کے مقابلے میں یہ قدرے کم رہے ہیں۔

یہ بھی چیک کریں

test vieo

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے